خواجہ آصف کی ایرانی قیادت سے ملاقات، ٹرمپ کی نئی پالیسی کے اعلان کے بعد علاقائی صورتحال پر تبادلہ خیال

  • بدھ, 13 ستمبر 2017 01:15

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) پاکستان کے وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف کے دورہ ایران کا اعلامیہ جاری کر دیا گیا، اعلامیے کے مطابق خواجہ آصف نے ایرانی صدر ڈاکٹر حسن روحانی سے ملاقات کی۔ ملاقات میں دونوں رہنماوں کے درمیان باہمی دوستانہ اور تاریخی برادرانہ تعلقات کو فروغ دینے پر اتفاق کیا گیا۔

اس موقع پر خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ پاکستان پُرامن ہمسائیگی کے اصول پر عمل پیرا ہے۔ اس مقصد کیلیے ایران کیساتھ ملکر علاقائی سلامتی کے لئے کام کرنا چاہتے ہیں۔

دیگر ذرائع کے مطابق وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف کا کہنا ہے کہ پاکستان پرامن ہمسائیگی کے اصول پر عمل پیرا ہے اور اس مقصد کے لئے ایران کے ساتھ مل کر علاقائی سلامتی کے لئے کام کرنا چاہتے ہیں۔ وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف کے دورہ ایران کا اعلامیہ جاری کر دیا گیا۔ دفتر خارجہ سے جاری اعلامیہ کے مطابق تہران میں ایرانی صدر حسن روحانی سے ملاقات میں دونوں رہنماؤں کے درمیان امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی نئی پالیسی کے اعلان کے بعد علاقائی صورتحال اور دوطرفہ تعلقات کے مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اعلامیہ میں کہا گیا کہ ڈاکٹر حسن روحانی اور خواجہ آصف نے مشترکہ تاریخ اور ثقافت پر مبنی دونوں ممالک کے برادرانہ تعلقات کو مضبوط بنانے پر تبادلہ خیال اور دوطرفہ تعاون بڑھانے کو یقینی بنانے کی باہمی خواہش کا اظہار کیا۔

قبل ازیں وزیر خارجہ نے اپنے ایرانی ہم منصب جواد ظریف سے ملاقات کی، جس میں علاقائی سلامتی کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ جامع مذاکرات میں دونوں ممالک کے وزرائے خارجہ نے دوطرفہ تعلقات، علاقائی صورتحال اور افغانستان میں امن و استحکام کی صورتحال پر بات چیت ہوئی۔

دونوں وزرائے خارجہ کے درمیان مذاکرات میں مقبوضہ کشمیر اور میانمار میں مظالم اور انسانی حقوق کی پامالیوں پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے روہنگیا مسلمانوں کے لئے ہنگامی طور پر انسانی کوششوں کی ضرورت پر اتفاق کیا گیا۔ مذاکرات میں مشیر قومی سلامتی ناصر خان جنجوعہ اور سیکریٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ بھی خواجہ آصف کے ہمراہ تھے۔

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.