پارہ چنار، عوام کی آرمی چیف، وزارت داخلہ، انٹیلیجنس اداروں اور پیمرا سے پر زور اپیل

  • ہفتہ, 08 جولائی 2017 14:47

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) وزیر داخلہ چوہدری نثار صاحب کو سوشل میڈیا پر فرقہ واریت تو نظر آ رہی ہے مگر وصال ٹی وی جیسے چینل نظر نہیں آ رہے ہیں۔

وصال ٹی وی اور اورنگزیب فاروقی پاکستان میں فرقہ وارانہ آگ بھڑکانے میں پھر سے متحرک ہوگئے ہیں جبکہ کے پی کے حکومت اور پیمرا کی خاموشی عوام کے اذہان میں سوال کھڑا کر رہی ہے۔

یہ ٹی وی مسلسل پاراچنار اور اہل تشیع کے خلاف زہر آلود زبان استعمال کر رہا ہے۔

اس ٹی چینل کو گزشتہ 6 مہینوں میں پاراچنار کے 5 دھماکے اور 600 افراد کی المناک شہادت نظر نہیں آرہی ہے۔ یہ چینل مسلسل یہ پروپیگنڈہ کر رہا ہے کہ پاراچنار میں ایران کے ٹریننگ کیمپس ہیں وہاں پر دہشت گردوں کو تربیت دی جاتی ہے۔ وصال ٹی وی کے ان نفرت انگیز اور اشتعال انگیز نشریات سے پاراچنار شہر میں دہشت گردوں اور انتہا پسندوں کی طرف سے مزید دھماکوں کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔

اگر اس چینل کی نشریات اسی طرح جاری رکھی گئیں تو کرم ایجنسی میں فرقہ وارانہ لڑائی کے وہ شعلے بھڑک سکتے ہیں جن کی وجہ سے سارا ملک اس کی لپیٹ میں آئے گا۔

ہم شیعہ سنی عوام نے بہت مشکل سے کرم، سدہ اور پاراچنار میں امن کا بیج بویا ہے۔ اگر وصال ٹی وی اور اورنگزیب فاروقی جیسے لوگوں کو لگام نہ دی گئی تو بہت جلد یہاں فرقہ وارانہ آگ دوبارہ بھڑک سکتی ہے اور پھر اسکا بجھانا مشکل ہو جائے گا۔

اورنگزیب فاروقی جیسے لوگوں نے پہلے بھی پاراچنار میں شیعہ اور حسینیت مردہ باد(نعوذباللہ) کے نعرے لگائے تھے جن کی وجہ سے پاراچنار میں فرقہ وارانہ فسادات شروع ہوگئے تھے۔

حکومت اگر کالعدم تنظیموں کے رہنماؤں کو اس طرح کھل کر جلسے کرنے اور فرقہ واریت کا زہر پھیلانے کی اجازت دے گی تو پھر اسی طرح خود کش دھماکے ہوتے رہیں گے۔

پاراچنار میں کوئی ایرانی ٹریننگ کیمپ نہیں ہے اور نہ ہی کوئی ایرانی ملیشیا موجود ہے۔ ہم وصال ٹی وی اور اورنگزیب فاروقی کو بتانا چاہتے ہیں کہ وہاں پاراچنار میں پاکستان آرمی فاٹا کا سب سے بڑا بیس موجود ہے۔ کیا اتنی بڑی پاکستان آرمی کو نہیں پتہ۔۔۔؟ کیا وہاں پر موجود پاکستانی انٹیلیجنس اداروں کو نہیں معلوم۔۔۔؟ اگر آرمی کو پتہ ہےکہ پاراچنار میں ایرانی ٹریننگ کیمپ ہیں تو پاک آرمی نے آج تک ان کے خلاف کارروائی کیوں نہیں کی۔۔۔۔؟ اگر پاک آرمی نے پاراچنار میں ایرانی ٹریننگ کیمپس کیخلاف کارروائی نہیں کی تو پھر تو پاک آرمی بھی ملک دشمنی میں ملوث ہے۔۔۔؟ لیکن ایسا ہرگز نہیں ہے اور نہ ہی ہوسکتا ہے کہ پاراچنار میں غیر ملکی ٹریننگ کیمپس ہوں اور پاکستانی آرمی ان کے خلاف کارروائی نہ کرے۔

ہاں وصال ٹی وی اور اورنگزیب فاروقی جیسے عناصر کو پاراچنار میں ایرانی ٹریننگ کیمپ نظر آرہے ہیں تاکہ وہ سادہ لوح مسلمانوں کو گمراہ کر سکیں اور ان میں پاراچنار والوں اور بالخصوص شیعوں کے خلاف نفرت پیدا کر سکیں۔

وصال ٹی وی اور اورنگزیب فاروقی ہمیں یہ بتائیں کہ پاراچنار والوں نے پچھلے 6 سالوں میں ملک میں کتنے خود کش دھماکے کئے ۔۔۔؟

پاراچنار والوں نے کتنے پاکستانیوں کو بے گناہ مارا۔۔۔؟

کیا سدہ، بگن اور کرم ایجنسی کے دوسرے کسی بھی سنی نشین شہر میں تاحال کوئی دھماکہ ہوا۔۔۔؟

کیا شیعوں نے مسلمانوں کی کسی بھی عبادت گاہ کو نشانہ بنایا۔۔۔؟

کیا شیعوں نے جلسوں میں سنی کافر کا کوئی بھی نعرہ لگایا۔۔۔؟

اگر نہیں تو خدا را ہم پاراچنار اور سدہ کے عوام میں اب تھوڑا سا اتفاق اور امن قائم ہوا ہے اس کو پارہ پارہ مت کرو۔ مسلمانوں کے درمیان اچھی اور محبت کی بات اگر نہیں کر سکتے تو خدا را خاموش رہو۔

ہم پاراچنار کے شیعہ سنی عوام سے اپیل کرتے ہیں کہ آپ کو اللہ اور رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کا واسطہ ایسے ملک دشمنوں کے خلاف اکھٹے ہو کر آواز بلند کرو ورنہ تم سب بے گناہ مارے جاوگے۔۔۔

پاکستان آرمی چیف اور تمام انٹیلیجنس اداروں سے درد مندانہ اپیل کرتے ہیں کہ ایسے عوامل کے خلاف جلد از جلد کارروائی عمل میں لائی جائے ورنہ ملک بڑی تباہی و بربادی کی طرف جا سکتا ہے۔

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.